جولٹا نیوز    

خبر سب سے پہلے  

JoltaNews Logo

کے پی کے اور بلوچستان میں ڈرون حملے کر سکتے ہیں، امریکہ

کے پی کے اور بلوچستان میں ڈرون حملے کر سکتے ہیں، امریکہ

امریکہ نے ایک با ر پھر پاکستان کو خبر دار کیا ہے آنے والے چند مہینوں میں پاکستان کے صوبے کے پی کے اور بلوستان میں ڈرون حملے کر سکتا ہے۔

جنوبی ایشیا کے لیے سینئر ایسوسی ایٹ مائیکل کوگل مین نے انٹرویو دیتے ہوے کہا کہ پاکستان اور امریکہ کے تعلقات اس وقت انتہائی نازک دور سے گزر رہے ہیں اور اگر پاکستان نے امریکہ کے مطالبات تسلیم نہ کیے تو امریکہ پاکستان پر دباہ بڑھانے کے لیے کے پی کے اور بلوچستان میں ڈرون حملے کر سکتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ امریکہ اس سے پہلے بھی کئی بار پاکستان کو دھمکی دے چکا ہے لیکن کوئی کاروائی عمل میں نہیں لائی جاتی تھی لیکن اس بار ٹرنپ انتظامیا ں عملی کاروئی کر سکتی ہے۔

مائیکل کوگل مین نے کہا اس سے پہلے اب تک بلوچستان میں صرف ایک ہی ڈرون حملہ کیا گیا تھا جس میں ملا منصور ہلاک ہوا تھا۔اس کے ساتھ اگر امریکہ کو اس بات کو یقین ہو گیا کہ پاکستان حکومت کا دہشتگردوں سے رابطہ ہےتو امریکہ پاکستان کے انٹیلی جنس پر پابندی بھی لگا سکتا ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ امریکہ پاکستان کا نیٹو اتحادی بھی ختم کر سکتا ہے لیکن یہ اتنا آسان نہیں ہو گا کیونکہ اگر امریکہ نے ایسا کیا تو پاکستان نیٹو کی سپلائی بند کر سکتا ہے جس کے لیے امریکہ کو بڑا نقصان ہو گا کیونکہ متبادل راستہ نیٹو سپلائی کا مہنگا پڑے گا ۔

یہ خبر بھی پڑھیں: پاکستان میں صبح سویرے بم دھماکہ ، نقصان ہو گیا

سی پیک کے حوالے بات کرتے ہوئے مائیکل کوگل مین نے کہا کہ امریکہ بھارت کے ساتھ تعلقات مزید بہتر بنانے کے لیے سی پیک کی مخالفت کر سکتا ہے۔

مائیکل کوگل مین نے امید مائیکل کوگل مین نے امید ظاہر کی ہے کہ پاکستان اور امریکہ کے تعلقات میں بہتری آئے گئی کیونکہ اسی میں دونوں ممالک کی بہتری ہو گی۔

loading...